کینسر جیسے مرض کی تشخیص کے لئے سب سے تیز ترین اور کم خرچ والا طریقہ چیونٹیوں کو تربیت یافتہ بنانا ہے۔

    آن لائن ( اعتماد ٹی وی ) ماہرین بیماریوں کی تشخیص کے لئے مختلف جانوروں کو تیار کرتے ہیں اور مشاہدات سے نتائج نکالتے ہیں لیکن اس مرتبہ سائنسدانوں نے جانوروں کی بجائے جس کا انتخاب کیا ہے وہ حیران کن بات ہے ۔ ماہرین نے زمین پر موجود حشرات میں سے چیونٹیوں کو چُنا ہے۔

     

     

    Advertisement

    ذرائع کے مطابق ، پیرس میں جدید تحقیق سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ چیونٹیوں میں چیزو ں کو سونگھنے کی قدرتی صلاحیت موجو دہے اپنی اس صلاحیت کو بروئے کار لاتے ہوئے سرطان جیسی موذی مرض کی تشخیص با نسبت دوسرے جانداروں کے زیادہ تیز رفتاری سے ہو سکتی ہے۔

     

     

    Advertisement

    سی آر این ایس فرانس میں ایک منصوبے پر کام کے دوران سائندانوں نے تجربہ کیا ہے کہ چیونٹیاں سرطان کے خلیات کی شناخت بہت جلد اور درست طریقے سے کرتی ہیں۔ کتوں کی سونگھنے کی حس بہت تیز ہوتی ہے لیکن ان کی تربیت اور دیکھ بھال پر بہت خرچ آتا ہے۔

     

     

    Advertisement

    کتوں کی نسبت چونٹیوں کی تربیت پر خرچ کم آتاہے اور وہ جلدی ہی تربیت حاصل کر لیتی ہیں کتے کی تربیت میں ایک سال تک کا عرصہ درکار ہوتا ہے۔ لیکن چیونٹیاں صرف چند منٹوں میں اس قابل بن جاتی ہیں۔ فارمیکاع سکانوع کی چیونٹیوں میں یہ صلاحیت موجود ہوتی ہے کہ وہ نامیاتی مرکبات کو سونگھ کر شناخت کر سکتی ہیں۔

     

     

    Advertisement

     

    ماہرین نے پہلے مرحلے میں چھاتی کے سرطان کے دوٹیسٹوں کے لئے چیونٹیوں کو تربیت دی گئی۔ ان کو اس میں کامیابی حاصل ہو ئی کہ چیونٹیوں نے کتوں کی طرح ہی کامیابی سے سرطان شدہ اور غیر سرطان شدہ خلیا ت کی نشاندہی کی ۔ چیونٹیوں میں باسی غذا ، دھماکہ خیز مواد کے ساتھ ساتھ بہت سے امراض کی شناخت کرنے کی صلاحیت بھی موجود ہوتی ہے۔

     

    Advertisement

     

     

    کینسر جیسے مرض کی تشخیص کے لئے سب سے تیز ترین اور کم خرچ والا طریقہ چیونٹیوں کو تربیت یافتہ بنانا ہے۔

    Advertisement

     

     

     

    Advertisement