افغانستان حکومت نے اپنی پابندیوں کا رخ عورتوں کی جانب میڈیا کی طرف موڑ دیا، بڑی پابندی عائد کر دی

    افغانستان کی حکومت نے خواتین پر پابندیوں کے بعد ایک اور جانب نظر کر دی۔

     

    آن لائن ( اعتماد ٹی وی ) گزشتہ روز افغانستان کی موجودہ حکومت کی جانب سے خواتین کے بغیر محرم سفر کرنے پر پابندی عائد کر دی گئی۔ اس حوالے سے کوئی لچک بھرا رویہ نہیں دکھایا گیا ۔ اب افغانستان حکومت نے اپنی پابندیوں کا رُخ دوسری جانب کر دیا ہے۔ افغانستان حکومت نے برطانیہ کے بڑے نشریاتی ادارے “بی بی سی” کی نشریات کو بند کر دیا ہے۔

    Advertisement

     

     

    ذرائع کے مطابق بی بی سی کے تین بڑے چینلز کو بند کر دیا گیا ہے جو تین مختلف زبانوں میں اپنی نشریات جاری رکھے ہوئے تھے۔

    Advertisement

     

     

    ان میں سے ایک فارسی، ایک پشتو اور ایک چینل ازبک زبان میں اپنی نشریات چلا رہا تھا۔ ان اداروں کو اچانک نشریات بند کر نے کا کہا گیا ہے۔ اس حوالے سے کوئی نوٹس یا وجہ بیان نہیں کی گئی۔

    Advertisement

     

     

    افغانستان میں موجود بی بی سی کے سربراہ نے بتایا کہ افغانستان کی موجودہ حکومت کا یہ فیصلہ پریشان کن ہے۔ اور لوگوں کے لئے ایسی صورتحال اچھی نہیں ۔

    Advertisement

     

     

    افغانستان کے لوگوں پر پابندیاں عائد کرنے کے بعد اب سے ان کا رخ میڈیا کی جانب ہو گیا ہے چینلز کے بند ہونے سے اداروں کے ساتھ ساتھ عوام کو بھی نقصان ہو گا۔ کیونکہ ایک اندازے کے مطابق افغانستان کی تقریباً 6 ملین عوام بی بی سی کی نشریات دیکھتی تھی ۔

    Advertisement

     

     

    افغانستان حکمرانوں کی جانب سے اس حوالے سے کسی قسم کا کوئی بیان نہیں سامنے آیا ۔ اور اقوام متحدہ کی جانب سے بھی افغان حکومت کے اس اقدام کی مذمت کی گئی ہے۔

    Advertisement

     

     

     

    Advertisement