مُردوں کو سر دخانہ میں رکھنا کیسا عمل ہے ؟ جانئے تفصیل

    مُردو ں کو سر دخانہ میں رکھنا کیسا عمل ہے ؟

     

    لاہور (اعتماد ٹی وی) کچھ لوگ علمائے کرام سے سوال کرتے ہیں کہ مرنے کے بعد مردے سے سوالات جواب قبر میں ہوتے ہیں یا باہر بھی ہو جاتے ہیں۔ قبر کے دو مفہوم ہیں کہ ایک گڑھا کھود کر میت کو اُس میں دفن کیا جائے تو اُس کے اعمال کے مطابق اس کو انعام و عذاب ہو جائے۔

    Advertisement

     

    شریعت کے مطابق قبر وہ مقام ہے جہاں انسان مرنے سے لے کر دوبارہ زندہ ہو کر اُٹھے ۔ مثال کے طور پر اگر کسی کی موت سمندری سفر میں ہو اور اُس کو غسل دے کر کفن دفن کر کے سمندر میں پھینک دیا جائے اور مچھلیاں اُس کو کھا جائیں تو کیا اُس سے سوال جواب نہیں ہونگے ایسا ممکن نہیں ہے ۔

     

    Advertisement

    جس وقت اُس کا انتقال ہوا اُس کے بعد سے ہی اُس کے سوالات و جوابات کا سلسلہ شروع ہو جاتا ہے۔

     

    اس لئے جو میت سرد خانے رکھی جاتی ہیں تو اُن کا بھی سلسلہ شروع ہو جاتا ہےاُس کے لئے اُن کو دفن کرنا شرط نہیں ہے۔ اس لئے علمائے کرام نے مردے کے کفن دفن کے انتظامات میں جلدی کرنے کا کہا گیا ہے۔ مردے کو اذیت دینے سے منع کیا گیا ہے۔

    Advertisement

     

    بعض احادیث میں بھی اسی بات کی تلقین کی گئی ہے کہ جتنا جلد ہو سکے مردے کو دفن کرو۔

     

    Advertisement