عمران خان نے رویت ہلال کمیٹی کے چیئرمین مفتی منیب الرحمن کو عہدے سے ہٹا دیا۔ اصل وجہ سامنے آگئی۔۔

    وفاقی حکومت نے مفتی منیب الرحمن کو رویت ہلال کمیٹی کے چیئرمین کے عہدے سے ہٹادیا ہے۔

     

    وزارت مذہبی امور کی جانب سے جاری ایک نوٹیفکیشن کے مطابق ، مفتی منیب کی جگہ مولانا عبد الخیر آزاد کو رویت ہلال کمیٹی کا چیئرمین بنا دیا گیا۔ عبد الخیر آزاد اب تک لاہور کی مشہور بادشاہی مسجد کے خطیب تھے۔

    Advertisement

     

    یہ پیش رفت 19 رکنی کمیٹی میں ایک بڑے ردوبدل کے حصے کے طور پر سامنے آئی ہے۔ کمیٹی میں سپرکو ، سائنس اینڈ ٹکنالوجی کی وزارت اور میٹ آفس کے نمائندوں کو شامل کیا گیا ہے۔

     

    Advertisement

    مفتی منیب الرحمن ایک طویل عرصے سے رویت ہلال کمیٹی کی سربراہی کر رہے تھے۔ تاہم اکثر چاند دیکھنے کے اعلان پر تنازعہ کھڑا ہوتا تھا۔

     

    مفتی منیب الرحمن کی زیرقیادت کمیٹی اس معاملے پر سائنس اور ٹیکنالوجی کے وزیر فواد چوہدری کے ساتھ معاملات طے کررہی تھی۔ فواد چوہدری نے بار بار کمیٹی کو تحلیل کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔

    Advertisement

     

    مئی میں فواد چوہدری نے اعلان کیا تھا کہ ان کی وزارت عید ، رمضان اور محرم کی تاریخوں کے لئے ایک اسلامی کیلنڈر قائم کرے گی۔

     

    Advertisement