پی آئی اے کے پائلٹ کی اُڑن طشتری کی ویڈیو کے حوالے سے پی ائی اے کے ترجمان کا اہم بیان سامنے آگیا

     

    پاکستان انٹرنیشنل ایئر لائن نے تصدیق کی ہے کہ لاہور جانے والی کمرشل پرواز پی کے 304 کے پائلٹ نے 23 جنوری کو ملتان اور ساہیوال کے درمیان فضائی حدود میں آسمان پر گھوم رہی ایک غیر معمولی چیز کو دیکھا تھا۔

     

    Advertisement

    پی آئی اے کے ایک ترجمان نے بتایا کہ کپتان نے اپنے طیارے سے ایک ہزار فٹ بلندی پر کچھ دیکھا ، جو 35،000 فٹ کی بلندی پر تھا ، اور اس نے ایک ویڈیو بنائی جو سوشل میڈیا پر گردش کررہی تھی۔

     

    انہوں نے کہا کہ اس بارے میں یقین سے کچھ کہنا قبل از وقت ہوگا کہ پائلٹ نے آسمان میں کیا دیکھا، ضروری نہیں کہ یہ اڑن طشتری ہی ہو۔ انہوں نے مزید کہا کہ کپتان نے فوری طور پر واقعے کی اطلاع دی تھی اور معیاری آپریٹنگ طریقہ کار کے مطابق اس پر غور کیا جارہا ہے۔

    Advertisement

     

    اسی اثناء ، جیو نیوز نے اطلاع دی ہے کہ شام 4 بج کر 30 منٹ پر پائلٹ کے ذریعہ نامعلوم پروازی آبجیکٹ کو سورج کی روشنی کی موجودگی کے باوجود انتہائی روشن تھا۔

     

    Advertisement