Headlines

    96 لاکھ کی پانی کی بوتل کیسی دکھتی ہیں، جان کر آپ بھی شکر کا کلمہ پڑھیں گے۔

    بظاہر تو پانی ایک عام سی لیکن ورلڈ ہیلڈ اورگنائزیشن کے مطابق اس وقت دنیا میں تقریباً 71 کروڑ افراد صاف پانی کے بنیادی حق سے محروم ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ صاف پانی نہ ملنے کی وجہ سے ہر ہفتے 30 ہزار تک لوگ اس دنیا سے چلے جاتے ہیں۔

    اگرچہ ہماری زمین 70 فیصد پانی پر مشتمل ہے لیکن اس اتنے بڑے ذخیرے میں سے صرف 2 فیصد پانی ہی پینے کے قابل ہے۔ صاف پانی کی اس ہی کمی کی وجہ سے فائدہ اٹھاتے ہوئے دنیا میں ایسی کمپنیاں بھی موجود ہیں جو کہ صرف پانی بیچ کر سالانہ کروڑوں کما لیتی ہیں۔ اور اپنے پانی کو سب سے صاف ہونے کا دعویٰ بھی کرتی ہیں۔ ان کمپنیوں میں شامل چند کمپنیاں درج ذیل ہیں:
    بوٹل واٹر بیچنے والی کمنیوں میں فِجی واٹر کمپنی جو کہ امریکہ میں کافی عام اور مشہور ہے۔ آدھا لیٹر بوتل پانچ ہزار میں بیچنے والی یہ کمپنی ایک کینیڈین بزنس مین ڈیڈ گلمور کی تخلیق ہے۔ اس کمپنی کے پانی کا ذائقہ اتنا خاص نہیں ہوتا۔

    بلنگ ایچ ٹو او: یہ اپنی دلکش بوتلوں کی وجہ سے بھی دنیا بھر میں پہچانی جاتی ہے۔ اس کی ایک بوتل 5 ہزار فی لیٹر سے شروع ہر کر 12 ہزار تک فروخت کی جاتی ہے۔

    Advertisement

    نیواس واٹر: یہ جرمنی کی ایک کمپنی ہے، اپنی خوبصورت پیکنگ کی وجہ سے اس کمپنی نے بھی دنیا میں مہنگا پانی بیچنے والی کمپنیوں میں اپنا نام بنا لیا ہے۔ ان کی ایک پانی کی قیمت 5 ہزار سے لے کر 15 ہزار تک ہوتی ہے۔

    دنیا کی سب سے مہنگی ترین پانی کی بوتل کا اعزاز ایکوا ڈی کرسٹیلو آموڈیگیانی نامی اس بوتل کو جاتا ہے جس کو 2010 میں گلوبل وارمنگ سے بچاؤ کی خاطر چندہ اکٹھا کرنے کی ایک مہم کے دوران 60 ہزار ڈالر میں بیچا گیا تھا۔ اس بوتل میں سونے کا کام کیا گیا ہے۔

    Advertisement