پانچ سالہ بچی کا پوری دنیا میں کارنامہ، دنیا کا انوکھا اعزاز حاصل کر لیا

    دنیا کی سب سے کم عمر مصنفہ کا اعزاز پانچ سالہ بچی نے اپنے نام کر لیا۔

     

     

    Advertisement

    آن لائن (اعتماد ٹی وی) برطانیہ سے تعلق رکھنے والی 5 سالہ بچی بیلا جے ڈارک نے ایک کتاب لکھ کر دنیا میں سب سے کم عمر مصنفہ ہونے کا اعزاز اپنے نا م کر لیا ۔ ان کا نام گینز بُک آف ورلڈ ریکارڈ میں درج کیا گیا ۔ گینز ورلڈ ریکارڈ سے متعلقہ حکام کا کہنا ہے کہ بچی کی عمر 5 سال 211 دن ہے۔

     

     

    Advertisement

    بیلا جے ڈارک نے “دی لوسٹ کیٹ ” کے نام سے ایک کہانی تحریر کی ۔ اس کہانی میں ایک بلی کو دکھایا گیا ہے جو رات کے اندھیرے میں گھر سے باہر نکلتی ہے اور گم ہو جاتی ہے۔

     

     

    Advertisement

    ذرائع کے مطابق یہ کہانی 31 جنوری 2022 کو جنجررفائیر پریس کے ذریعے شائع کی جا چکی ہے ۔ جس کے بعد اس کو کتاب کی شکل دی گئی اور اب تک اس کی ایک ہزار سے زائد کتابیں فروخت ہو چکی ہیں۔

     

     

    Advertisement

    اس کتاب کے حوالے سے بیلا کا کہنا ہے کہ اس کہانی کا خیال ان کو اپنی ہی ایک ڈرائنگ دیکھکرآیا تھا۔ بچی کی والدہ کاکہنا ہے کہ بچی شروع سے ہی تصوراتی د نیا میں رہتی تھی کئی تخیلاتی کردار بھی بناتی تھی۔ تین سال کی عمر سے اس نے افسانوی کرداروں پر کہانیاں لکھنا شروع کر دی۔

     

     

    Advertisement

    بیلا نے بتایاکہ کتاب لکھنے میں 5 دن کا وقت لگا کتاب میں موجود تمام تصاویر کی ڈرائنگ اس نے خود کی ہے۔ بیلا کا کہنا ہے کہ اس کتاب کے ذریعے بچوں کو پیغام دیا ہے کہ رات کے وقت تنہا باہر نہ جائیں ورنہ نقصان ہو گا ۔

     

     

    Advertisement

    گینز ورلڈ حکام کا کہنا ہے کہ بیلا سے قبل سب سے کم عمر مصنفہ کا ریکارڈ “ڈوروتھی اسٹریٹ ” نامی بچی کے پاس جس کی عمر 6 سال تھی اور اس نے 1964 اگست میں اپنی کتاب تحریر کی جس کا نام How the world beganتھا ۔