نواز لیگ اور تحریک انصاف میں بات ٹانگوں تک پہنچ گئی، انتہائی غیر مناسب الفاظ کا استعمال

تحریک انصاف اور نواز لیگ میں پہلے دن سے ہی سیاسی مخالفت عروج پر ہے، مگر اب بات حدیں بھی عبور کرتی جارہی ہے۔

 

تفصیلات کے مطابق، نواز لیگ کی اہم رکن اور سابقہ وزیراعظم پاکستان جناب نواز شریف کی بیٹی مریم صفدر نے ٹویئٹر پر یہ پیغام دیا کہ جب نواز شریف صاحب کی طراح عوام کا منتخب شدہ وزیراعظم ہو تو 126 دن کا دھرنا بھی ناکام ہو جاتا ہے۔ اس کے برعکس اگر سلیکٹڈ ہوں تو محض جلسے جلوسوں سے بھی ٹانگیں کانپنے لگ جاتی ہے۔ اتنا خوف ہے ملسم لیگ نواز کا کہ ہر جلسے سے پہلے وہاں کے رہنماؤں پر کریک ڈاؤن شروع ہو جاتا ہے۔ انھوں نے مزید کہا کہ حکومت کو گھر تو جانا ہی پڑے گا۔ انشاءاللہ۔

Advertisement

 

اس کے جواب میں وزیراعظم کے معاون خاص برائے مواصلات ڈاکٹر شہباز گل نے بھی بذریعہ ٹوئیٹر مریم صفدر کو جواب دیتے ہوئے کہا کہ یہ نا اہل کرپٹ لیگ ہر بات پر ٹانگیں کانپنیں کا زکرکیوں کرتے ہیں۔ کیا یہ ٹانگوں کے درمیان بیٹھے ہوتے ہیں پاؤں پکڑنے کے لئیے؟

 

Advertisement

ڈاکٹر شہباز گل نے مزید حالیہ گلگلت بلتسان کے الکیشن پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ مجرمہ مریم نے حلیمہ سلطان بننے، کرپشن کو قومی فریضہ بنا کر بیچنے کی کوشش کی۔

 

اس کے ساتھ ساتھ، پرچی چئیرمین بلاول نے ٹوپیاں پہننے، بہنانے اور اسٹیبلشمنٹ کے ساتھ معاملات میں ملی 12 نشستوں کا جعلی منجن بیچنے کی کوشش کی۔

Advertisement

 

ان کا کہنا تھا کہ گلگت بلتسان کی عوام نے ان دونوں کی کرپشن، جعلی بیانیے اور ٹوپیوں کو یکسر مسترد کر کے تحریک انصاف کا ساتھ دیا۔ حق اور سچ کی آواز کو بلند کیا۔

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *