آرمی کا پاکستان کو پوری دنیا میں منوانے کے لئے ایک اور بڑا قدم، روزگار کے مواقعے۔۔

    وزارت انفارمیشن ٹیکنالوجی اور فوج کے میڈیا ونگ ، انٹر سروسس پبلک ریلیشنز (آئی ایس پی آر) نے ملک کی متحرک صنعت کی ترقی اور فروغ کے لئے آپس میں تعاون کیا ہے۔

     

    اس سلسلے میں ہفتے کے روز راولپنڈی میں آئی ایس پی آر کے صدر دفتر میں منعقد ایک تقریب میں وفاقی وزیر برائے آئی ٹی و ٹیلی کام سید امین الحق ، سیکرٹری آئی ٹی اور ٹیلی کام شعیب احمد صدیقی اور ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل بابر افتخار نے شرکت کی۔

    Advertisement

     

    اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ انیمیشن انڈسٹری کا حجم عالمی منڈی میں تقریباً 270 بلین ڈالر ہے اور اس کی توقع ہے کہ 2025 تک یہ بڑھ کر 415 بلین ڈالر ہوجائے گی۔

     

    Advertisement

    فی الحال پاکستان میں انیمیشن والے افراد کو مطلوبہ انفراسٹرکچر اور پیشہ ورانہ تربیت اور کورسز تک رسائی بہت کم حاصل ہے۔

     

    انیمیشن کی صنعت پاکستان کی معیشت میں نمایاں حصہ لے سکتی ہے۔ اس سے روزگار کے مواقع پیدا ہوسکتے ہیں ، غیر ملکی سرمایہ کاری لاسکتی ہے اور تربیت یافتہ ورک فورس تیار کرنے میں مدد مل سکتی ہے۔

    Advertisement