خبردار، اگر آپ آم، آلو بخارا، خوبانی، کیلا، پیپیتا، ٹماٹر اور آڑوو وغیر استعمال کرتے ہیں، تو پھر ذرا سوچ کر اس پھل کو کھائے، یہ جگر کے امراض سیمت آپ کو کینسر بھی کر سکتا ہے۔

اعتماد نیوز، لاہور: پنجاب فوڈ اتھارٹی نے عوام الناس اور پھلوں سے منسلک کاروباری حضرات کے لئے انتباہ جاری کی ہے۔

 

 

Advertisement

فوڈ اتھارٹی کے مطابق، جو لوگ آم، آلو بخارا، خوبانی، کیلا، پیپیتا، ٹماٹر اور آڑوو کا کاروبار کرتے ہیں، وہ لوگ ان پھلوں کو جلدی پکانے کے لئے کیلشم کاربائیڈ کا استعمال کرتے ہیں۔ جس سے ایسٹیلین گیس نکلتی ہے، جو پھلوں کو پکانے کے ساتھ ساتھ، ان پھلوں میں بھی جذب ہو جاتی ہے۔

 

 

Advertisement

جدید تحقیق کے مطابق، ایسٹیلین گیس اعصابی کمزوری اور جگر کے امراض کا باعث بننے کے علاوہ نظام انہضام کو بھی متاثر کرتی ہے۔

 

 

Advertisement

جبکہ کیلشیم کاربائیڈ سے تیار ہونے والے پھلوں کا زیادہ اور مسلسل استعمال کینسر کا باعث بھی بنتا ہے۔

 

 

Advertisement

اسی صورت حال کی پیش نظر پنجاب پیور فوڈ ریگولیشن ایکٹ 2018 کے تحت پھلوں کو کیلشیم کاربائیڈ کے ذریعے پکانے پر مکمل پابندی لگا دی گئی ہے۔

 

 

Advertisement

اس لے لئے اب پھلوں کو پکانے کے لئے ایتھیلین سے بنے رائپینگ ایجنٹ کا استعمال کرے تاکہ عوام اور کاروباری حضرات دونوں صحت مند کاروبار کر سکے۔

 

 

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *