صنعتی اور کاروباری افراد کے لے بڑا موقعہ، حکومت نے 12 سالوں بعد پابندی ختم کر دی۔

    آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) نے 12 سالوں کے بعد ملک میں نئے سی این جی اسٹیشنوں کے لئے نئے لائسنس کے اجراء پر پابندی ختم کردی ہے۔

     

    اوگرا کے مطابق ، نئے لائسنس دیئے جائیں گے تاکہ ریگیسفائیڈ لفیفائیڈ نیچرل گیس (آر ایل این جی) پر سی این جی اسٹیشن چلائے جائیں۔ دلچسپی رکھنے والے افراد کے لئے ادارے نے اخبارات میں اشتہار شائع کروا دیے۔

    Advertisement

     

    اپریل 2011 میں ، وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی نے ملک بھر میں صنعتی اور تجارتی گیس کے نئے کنیکشن کی فراہمی پر چھ ماہ کی مدت کے لئے پابندی عائد کر دی تھی۔

     

    Advertisement

    مزید پڑھیے: شاہد آفریدی کا ایسا کارنامہ کہ سادگی کے سارے ریکارڈ توڑ دیئے، ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل

     

    مذکورہ مدت ختم ہونے پر ، گیلانی نے ستمبر 2011 میں سی این جی سیکٹر کے حوالے سے کچھ تجاویز کو منظور کیا تھا جس کے تحت اوگرا نے متوقع درخواست دہندگان کو مارکیٹنگ کے لائسنس جاری کیے تھے۔

    Advertisement

     

    جنوری 2013 میں وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف نے سابق وزارت پیٹرولیم اور قدرتی وسائل کی طرف سے پیش کردہ سمری لی اور دوبارہ سی این جی اسٹیشنوں کے قیام کے لئے نئے عارضی لائسنس کے اجرا پر پابندی عائد کردی۔

    Advertisement